دعوت اسلام کے لئے کفار سے میل ملاپ

 از    November 19, 2017

فتویٰ : مفتی اعظم سعودی عرب شیخ ابن جبرین حفظ اللہ

سوال : کیا عیسائی اور ہندو وغیرہ غیر مسلموں کو اسلام کی دعوت دینے کے لیے ان سے میل جول رکھنا ان کے ساتھ کھانا پینا، گفتگو کرنا اور حسن معاملہ کرنا جائز ہے ؟
جواب : دعوت الی اللہ، اسلامی تعلیمات کی تشریح و تو ضیح، دین حنیف اپنانے کی ترغیب دینا، دین داروں کے لئے اچھے انجام کا بیان اور بے دین لوگوں کے لئے سزا و عقاب کے اظہار جیسے امور کی انجام دہی کے لئے کفار اور غیر مسلم لوگوں سے میل ملاپ کرنا، ان کے ساتھ مجلس کرنا اور انس و مودت کا اظہار کرنا جائز ہے۔ چونکہ اس کا انجام اچھا ہے، لہٰذا اس بارے میں ان کی مصاحبت اور دوستی کا اظہار قابل معافی ہے۔

 

نئے مضامین بذریعہ ای میل حاصل کیجیے

تمام مضامین

About Tohed.com

Tohed.com is an Urdu Islamic Website, aiming to preach true Islamic Information based on Qur'an and Sunnah. Here you can find out hundreds of urdu articles by reputed scholars. It's a completely non-commercial project with an objective to propagate Information about Islam in native language for the sub-continent readers.