آب زم زم کی برکت

 از    July 7, 2015

سید نا ابو ذر غفاری ؓ بیان کرتے ہیں کہ مجھ سے رسول اللہ ﷺ نے پوچھا کہ آپ  یہاں (حرم) میں کب سے ہیں ؟ کہتے ہیں کہ میں نے کہا کہ تیس دنوں سے یہاں ہوں ، آپ ﷺ نے فرما یا، تیس دنوں سے  یہاں ہو؟ میں نے کہا ، جی ہا ں ! آپ ﷺ نے پوچھا، آپ کا کھانا کیا تھا ؟ میں نے کہا، آبِ زمزم کے علاوہ میرا کوئی کھانا پینا نہیں تھا، یقیناً میں موٹا ہوگیا ہوں ، میرے پیٹ کی سلوٹیں ختم ہوگئی ہیں ، میں نے اپنے کلیجے  میں بھو ک کی وجہ سے لاغری اور کمزوری تک محسوس نہیں کی ، کہتے ہیں کہ رسول اللہ ﷺ نے فرما یا :

انّھا مبارکۃ ، وھی طعام وشفاء سقم۔ “

آب ِ زمزم بابرکت پانی ہے ، یہ کھانا بھی ہے اور بیماری کی شفا بھی۔ “

 ( مسند الطیالسی : ص ۶۱،ح : ۴۸۷، وسندۂصحیح)

فائدہ: حدیث ماء زمزم لما شُرب لہ (  آبِ زمزم جس مقصد کے لیے پیا جائے ، وہ حاصل ہوجاتا ہے) جمیع سند یں ” ضعیف” ہیں ۔

نئے مضامین بذریعہ ای میل حاصل کیجیے

تمام مضامین

About Tohed.com

Tohed.com is an Urdu Islamic Website, aiming to preach true Islamic Information based on Qur'an and Sunnah. Here you can find out hundreds of urdu articles by reputed scholars. It's a completely non-commercial project with an objective to propagate Information about Islam in native language for the sub-continent readers.